تازہ ترین خبریں
16خواتین سرکاری ملازمین کا بے نظیرانکم سپورٹ پروگرام سے رقم لینے کا اعتراف

16خواتین سرکاری ملازمین کا بے نظیرانکم سپورٹ پروگرام سے رقم لینے کا اعتراف

پشاور:ایف آئی اے کا کہنا ہے کہ سرکاری محکموں کی 16خواتین ملازمین نے بے نظیرانکم سپورٹ پروگرام سے رقم لینے کا اعتراف کرلیا، نادرا نے رقم لینے والے 343 افراد میں سے بیشتر کا ریکارڈ فراہم کردیا۔

تفصیلات کے مطابق بے نظیرانکم سپورٹ پروگرام میں سرکاری ملازمین کے مبینہ غبن کے معاملے میں ایک اور انکشاف سامنے آیا ، ایف آئی اے کا کہنا ہے کہ سرکاری محکموں کی 16 خواتین ملازمین نے بھی رقوم وصول کیں، خواتین ملازمین محکمہ تعلیم، صحت و دیگر اداروں کی ہیں۔حکام کا کہنا تھا کہ 16میں سے15 خواتین ملازمین ایف آئی اے میں پیش ہوئیں اور بے نظیرانکم سپورٹ پروگرام سے رقم لینے کااعتراف کیا۔

ایف آئی اے حکام نے مزید کہا کہ دیگرسرکاری ملازمین نے اپنے اہل خانہ کے نام پررقوم لیں، اہل خانہ کے نام پررقوم لینے والوں میں سے بیشترکی نشاندہی ہوگئی، نادرانے رقم لینے والے343 افرادمیں سے بیشترکاریکارڈفراہم کردیا ہے۔ایف آئی اے کا کہنا ہے کہ مختلف اضلاع سے افسران پرمشتمل 6 رکنی ٹیم تحقیقات کررہی ہے۔

یاد رہے نیب راولپنڈی نے بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام میں مبینہ کرپشن کے خلاف ریفرنس دائر کیا تھا اور ریفرنس میں سابق چئیرمین بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام فرزانہ راجہ سمیت دیگر ملزمان کو فریق بنایا گیا تھا۔

واضح رہے گزشتہ ماہ بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام سے فائدہ اٹھانے والوں میں اعلیٰ سرکاری افسران کے شامل ہونے کا انکشاف ہوا تھا، رپورٹ کے مطابق گریڈ 17 سے 21 کے 2 ہزار 543 سرکاری افسران میں سے متعدد نے بیویوں کے نام پر پیسے وصول کیے، بلوچستان میں سب سے زیادہ سرکاری افسران پروگرام سے مستفید ہوئے۔

یہ بھی پڑھیں

اصل تبدیلی تو سعودی عرب میں آئی ہے،سعودی خاتون نے ایسا کام شروع کر دیا کہ نوجوانوں کی لائنیں لگ  گئیں

اصل تبدیلی تو سعودی عرب میں آئی ہے،سعودی خاتون نے ایسا کام شروع کر دیا کہ نوجوانوں کی لائنیں لگ گئیں

لاہور(میڈیا 92 نیوز رپورٹ) ڈاکٹر ماجد خان سے اصل تبدیلی تو سعودی عرب میں آئی …