تازہ ترین خبریں
سپریم کورٹ نیب کا سپروائزر نہیں ،نیب کس کو رکھے نہ رکھے سپروائز نہیں کر سکتے،چیف جسٹس پاکستان

سپریم کورٹ نیب کا سپروائزر نہیں ،نیب کس کو رکھے نہ رکھے سپروائز نہیں کر سکتے،چیف جسٹس پاکستان

اسلام آباد:سپریم کورٹ نے نیب خلاف ضابطہ تقرریاں عمل درآمد کیس نمٹا دیا،چیف جسٹس گلزاراحمد نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ سپریم کورٹ نیب کا سپروائزر نہیں ،نیب کس کو رکھے نہ رکھے یہ سپروائزنہیں کر سکتے ،نیب کے انتظامی فیصلوں سے کوئی ملازم متاثرہ ہے تو متعلقہ فورم پر جائے ،نیب کے متاثرہ ملازمین دادرسی کیلئے متعلقہ فورم سے رجوع کریں ۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں نیب خلاف ضابطہ تقرریاں عمل درآمد کیس کی سماعت ہوئی،چیف جسٹس گلزاراحمد کی سربراہی میں بنچ نے سماعت کی ، وکیل نیب نے کہاکہ نیب میں تقرریوں کے حوالے سے کمیٹی کی سفارش پر عمل ہو چکا ہے ،سفارشات پر عملدرآمد کی رپورٹ بھی عدالت میں دے چکے ہیں ،چیف جسٹس پاکستان نے ریمارکس دیتے ہوئے کہاکہ عدالت سے نیب کے بارے آبررویشنزکیوں مانگتے ہیں ۔

چیف جسٹس گلزاراحمد نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ سپریم کورٹ نیب کا سپروائزر نہیں ،نیب کس کو رکھے نہ رکھے یہ سپروائزنہیں کر سکتے ،نیب کے انتظامی فیصلوں سے کوئی ملازم متاثرہ ہے تو متعلقہ فورم پر جائے ،نیب کے متاثرہ ملازمین دادرسی کیلئے متعلقہ فورم سے رجوع کریں ۔سپریم کورٹ نے نیب خلاف ضابطہ تقرریاں عمل درآمد کیس نمٹا دیا۔

یہ بھی پڑھیں

نوجوان لڑکی نے 50 کلو وزن کم کرلیا، دیکھ کر آنکھوں پر یقین نہ آئے

نوجوان لڑکی نے 50 کلو وزن کم کرلیا، دیکھ کر آنکھوں پر یقین نہ آئے

لندن(میڈیا92نیوز) موٹاپے سے نجات حاصل کرنا جان جوکھوں کا کام ہے لیکن برطانیہ میں ایک …