تازہ ترین خبریں
سٹیل ملز کی بندش کے باوجود ملازمین کو تنخواہیں اور مراعات مل رہی ہیں ،حکومت ان تمام ملازمین کو فارغ کرے ،سپریم کورٹ

سٹیل ملز کی بندش کے باوجود ملازمین کو تنخواہیں اور مراعات مل رہی ہیں ،حکومت ان تمام ملازمین کو فارغ کرے ،سپریم کورٹ

اسلام آباد:سپریم کورٹ نے وفاقی حکومت سے پاکستان سٹیل ملز کے معاملے پر جواب طلب کرلیا،چیف جسٹس گلزاراحمد نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان سٹیل ملز2015 سے بند پڑی ہے،سٹیل ملز کی بندش کے باوجود ملازمین کو تنخواہیں اور مراعات مل رہی ہیں ،حکومت ان تمام ملازمین کو فارغ کرے ،پاکستان سٹیل ملز مسائل پیداکررہی ہے،اگر حکومت پاکستان سٹیل ملز چلاناچاہتی ہے تو نئے لوگ بھرتی کرے ۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں سٹیل ملز کے حوالے سے کیس کی سماعت ہوئی ،چیف جسٹس گلزاراحمد کی سربراہی میں بنچ نے سماعت کی،چیف جسٹس گلزاراحمد نے ریمارکس دیتے ہوئے کہاکہ پاکستان سٹیل ملز2015 سے بند پڑی ہے ،سٹیل ملز کی بندش کے باوجود ملازمین کو تنخواہیں اور مراعات مل رہی ہیں ،حکومت پر سٹیل ملز کاسالانہ اربوں کا بوجھ پڑ رہا ہے ۔

عدالت نے کہا کہ سیکرٹری صنعت و پیداوار معاملے کو فوری طور پر دیکھیں،چیف جسٹس پاکستان نے کہاکہ حکومت ان تمام ملازمین کو فارغ کرے ،پاکستان سٹیل ملز مسائل پیداکررہی ہے ،لگتا ہے ملک کا سارا بجٹ پاکستان سٹیل ملز میں چلا جائے گا ۔

چیف جسٹس گلزاراحمد نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ اگر حکومت پاکستان سٹیل ملز چلاناچاہتی ہے تو نئے لوگ بھرتی کرے ،موجودہ ملازمین کو بیٹھ کر کھانے کی عادت پڑ گئی ہے ،چیف جسٹس نے استفسار کیاکہ پاکستان سٹیل ملز کے ملازمین کو نوکری پر کیوں رکھا ہوا؟۔سپریم کورٹ نے وفاقی حکومت سے پاکستان سٹیل ملز کے معاملے پر جواب طلب کرلیا۔

یہ بھی پڑھیں

سندھ حکومت ریلوے کی زمین وگزار کرائے :سپریم کورٹ؛ تعمیرات ایسی نہ ہوں جو شہر میں دھبہ بن جائیں: چیف جسٹس

سندھ حکومت ریلوے کی زمین وگزار کرائے :سپریم کورٹ؛ تعمیرات ایسی نہ ہوں جو شہر میں دھبہ بن جائیں: چیف جسٹس

اسلام آباد(میڈیا92نیوز) سپریم کورٹ نے کراچی سرکلر ریلوے کیس میں آئندہ سماعت پر پیش رفت …