تازہ ترین خبریں
قانون بنانا اسمبلی کا اختیار ہے،محکمہ صحت نے قانون کیسے بنالیا،معاملے پروزیراعلیٰ کو طلب کرنا پڑا تو انہیں بھی طلب کریں گے،لاہورہائیکورٹ

قانون بنانا اسمبلی کا اختیار ہے،محکمہ صحت نے قانون کیسے بنالیا،معاملے پروزیراعلیٰ کو طلب کرنا پڑا تو انہیں بھی طلب کریں گے،لاہورہائیکورٹ

لاہو:رہائیکورٹ نے ڈاکٹروں کی ہڑتال اورایم ٹی آئی ایکٹ کےخلاف توہین عدالت کیس میں حکومت پنجاب اور سیکرٹری سپیشلائزڈ ہیلتھ کونوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کرلیا،جسٹس جواد حسن نے ریمارکس دیتے ہوئے کہاکہ کوئی بھول میں نہ رہے عدالت کے پاس توہین عدالت میں سزادینے کا اختیار ہے،قانون بنانا اسمبلی کا اختیار ہے،محکمہ صحت نے قانون کیسے بنالیا،اس معاملے پروزیراعلیٰ کو طلب کرنا پڑا تو انہیں بھی طلب کریں گے۔

ق لاہورہائیکورٹ میں ڈاکٹروں کی ہڑتال اورایم ٹی آئی ایکٹ کےخلاف توہین عدالت کیس کی سماعت ہوئی،عدالت نے کہا کہ کوئی بھول میں نہ رہے عدالت کے پاس توہین عدالت میں سزادینے کا اختیار ہے،قانون بنانا اسمبلی کا اختیار ہے،محکمہ صحت نے قانون کیسے بنالیا،محکمے صرف پالیسی بنانے اور انتظامی معاملات دیکھنے کا اختیار رکھتے ہیں،جائزہ لیں گے کہ ایم ٹی آئی ایکٹ کیسے بنایا گیا،عدالتی ہدایات مدنظررکھی گئیں یا نہیں؟۔

عدالت نے استفسار کیاکہ کیا ڈاکٹرایم ٹی آئی ایکٹ کےخلاف ہڑتال پرہیں؟ہڑتال کرنے سے روکاتھا،سیکرٹری وائی ڈی اے نے کہا کہ عدالتی احکامات کی پاسداری کررہے ہیں ہڑتال نہیں کی۔

جسٹس جواد حسن نے کہا کہ اس معاملے پروزیراعلیٰ کو طلب کرنا پڑا تو انہیں بھی طلب کریں گے،کورونا وائرس آ رہا ہے آپ نے ڈاکٹروں کیخلاف بل اسمبلی میں پیش کردیا۔عابد ساقی ایڈووکیٹ نے کہا کہ عدالتی حکم کےمطابق مجوزہ ایکٹ بھی عدالت میں پیش نہیں کیا گیا،عدالت نے ایڈووکیٹ جنرل پنجاب، سیکرٹری سپیشلائزڈ ہیلتھ سمیت دیگر کو کل جواب سمیت طلب کرلیا۔

یہ بھی پڑھیں

سندھ حکومت ریلوے کی زمین وگزار کرائے :سپریم کورٹ؛ تعمیرات ایسی نہ ہوں جو شہر میں دھبہ بن جائیں: چیف جسٹس

سندھ حکومت ریلوے کی زمین وگزار کرائے :سپریم کورٹ؛ تعمیرات ایسی نہ ہوں جو شہر میں دھبہ بن جائیں: چیف جسٹس

اسلام آباد(میڈیا92نیوز) سپریم کورٹ نے کراچی سرکلر ریلوے کیس میں آئندہ سماعت پر پیش رفت …